Breaking News
Home / پاکستان / بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس اختتام پزیر ، ملک میں تعلیمی ادارے بند کیے جا رہے ہیں یا نہیں ؟

بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس اختتام پزیر ، ملک میں تعلیمی ادارے بند کیے جا رہے ہیں یا نہیں ؟

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) کورونا وبا کی دوسری لہر کے دوران تعلیمی اداروں میں کورونا وائرس کیسز سامنے آنے کا سلسلہ تیزی سے جاری ہے۔ وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی زیر صدارت بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس آج ہوئی جو کہ ختم ہو چکی ہے ۔ اجلاس میں کورونا وباء کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر

موسم سرما کی چھٹیاں قبل از وقت دینے اور ان کی تعداد میں اضافے پر مشاورت کی گئی۔ وفاقی وزیر شفقت محمود نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ ہمارے لئے بچوں کی زندگی اور صحت اولین ترجیح ہے۔شفقت محمود کا مزیدکہنا ہے کہ تعلیمی اداروں سے متعلق جو فیصلہ ہو گا اس پر سب کو عمل کرنا ہو گا۔بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس وزرائے تعلیم نے سکولز بند کرنے کی مخالفت کر دی۔ یونیورسٹیز اور سکولز بند نہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ آئندہ ہفتے وزرائے تعلیم کا دوبارہ اجلاس ہو گا۔تعلیمی ادارے بند کرنے یا نہ کرنے سے متعلق حتمی فیصلہ آج شام این سی او سی کے اجلاس میں ہوگا۔سکولز بند کرنے یا نہ کرنے سے متعلق این سی او سی اجلاس میں جائزہ لیا جائے گا جس کے بعد حتمی منظوری دی جائے گی۔ قبل ازیں صوبائی وزیر تعلیم مراد راس نے کورونا وائرس کے باعث موسم سرما کی چھٹیوں کی مخالفت کی ہے۔ انہوں نے راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سب سے زیادہ کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد اسکولوں میں کیا جا رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اب تک 117 سکولوں میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جبکہ 16 سکول سیل کیے گئے ہیں۔صوبائی وزیر تعلیم نے مزید کہا کہ پنجاب میں سکول بند کرنے کے حوالے سے کوئی فیصلہ نہیں ہوا ۔ ​​​​​​​ میری سمجھ کے مطابق موسم سرما کی چھٹیاں نہیں ہونی چاہیے۔علاوہ ازیں صوبائی وزیر تعلیم برائے سکول ایجوکیشن پنجاب مراد راس نے کہا ہے کہ وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی قیادت میں صوبہ پنجاب میںکورونا اور ڈینگی وائرس سے متعلق ایس او پیز پر عمل درآمد جاری ہے۔

Share

About admin

Check Also

ایک شوہر نے شادی کی پہلی رات ہی اپنی بیوی سے انکار کردیا، اورپھر بیوی آگے بڑھی اور اپنے ہاتھ

ایک شوہر نے شادی کی پہلی رات ہی اپنی بیوی سے انکار کردیا، اورپھر بیوی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Powered by themekiller.com